بھارت کو فیصلہ کن میچ میں جنوبی افریقا کے ہاتھوں عبرتناک شکست

جنوبی افریقا کے 438 رنز کے جواب میں بھارتی ٹیم 224 رنز پر پویلین لوٹ گئی۔

جنوبی افریقا کے 438 رنز کے جواب میں بھارتی ٹیم 224 رنز پر پویلین لوٹ گئی۔

ممبئی: جنوبی افریقا نے بھارت کو پانچویں اور آخری ایک روزہ میچ میں 214 رنز سے شکست دے کر سیریز 2-3 سے اپنے نام کرلی

ممبئی کے وینکھڈے اسٹیڈیم میں کھیلے گئے میچ میں جنوبی افریقا نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 50 اوورز میں 4 وکٹوں کے نقصان پر 438 رنز بنائے جس میں تین بلے بازوں کی جانب سے شاندار سنچریاں بھی شامل ہیں۔ ہدف کے تعاقب میں میزبان بھارت نے جارحانہ انداز اپنانے کی کوشش کی لیکن وقفے وقفے سے وکٹیں گرتی چلی گئیں اور پوری ٹیم 35.5 اوورز میں 224 رنز پر پویلین لوٹ گئی۔ بھارت کی جانب سے اجنکایا ریہانے 87 اور شیکر دھاون 60 رنز کے ساتھ نمایاں بلے باز رہے جب کہ دیگر کھلاڑیوں میں کپتان مہندرا سنگھ دھونی 27،  روہت شرما 16، ویرات کوہلی 7، سریش رائنا 12، ایکزر پٹیل 5 رنز، بھونیشور کمار ایک اور ہربھجن سنگھ  بغیر کوئی رنز بنائے آؤٹ ہوئے۔ جنوبی افریقا کی جانب سے کگیسو رابادا نے 4، ڈیل اسٹین 3، عمران طاہر 2 اور کائل ایبٹ نے ایک وکٹ حاصل کی۔

جنوبی افریقا کے کپتان اے بی ڈیولیئرز نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا جو درست ثابت ہوا اور مہمان ٹیم نے بھارتی بلے بازوں کی جم کر پٹائی کرتے ہوئے 4 وکٹوں کے نقصان پر 438 رنز بنائے۔ اوپنر ڈی کاک اور ہاشم آملہ نے اننگز کا آغاز کیا تو ہاشم آملہ 23 رنز بناکر موہت شرما کی گیند پر آؤٹ ہوگئے جب کہ ڈوپلیسی اور ڈی کاک نے شاندار بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے گراؤنڈ میں چھکوں چوکوں کی بارش کردی تاہم 187 کے مجموعی اسکور پر ڈی کاک 109 رنز بنا کر سریش رائنا کا شکار بنے۔ جس کے بعد تیسری وکٹ پر فاف ڈپلوسی اور کپتان اے بی ڈیویلئرز کے درمیان 164 رنز کی شراکت قائم ہوئی اور ٹیم کا مجموعہ 351 تک پہنچا تو فاف ڈپلوسی 166 رنز بنا کر زخمی ہوگئے جب کہ انہوں نے اپنی اننگز میں 6 چھکے اور 9 چوکے لگائے۔

بھارتی بلے باز تیزی سے آگے بڑھتے اسکور کو روکنے کے لئے ہر گر اپناتے رہے لیکن ڈی کاک اور ڈپلوسی کے بعد کپتان ڈیولیئرز کا بلا رنز اگلتا رہا اور ڈویلئرز نے بلے بازوں پر کوئی رحم نہ کیا اور خوب دھلائی کی ، 47ویں اوور میں ڈیویلئرز 11 چھکوں اور 3 چوکوں کی مدد سے 61 گیندوں پر 119 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جب کہ فرحان بہاردین 16 رنز بنا سکے، ڈیوڈ ملر 22 اور ڈین ایلگر 5 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔ بھارت کی جانب سے بھونیشور کمار، موہت شرما،سریش رائنا اور ہربھجن سنگھ نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

واضح رہے کہ ایک روزہ کرکٹ میں کسی بھی ٹیم کی جانب سے سب سے زیادہ  دیا جانے والا ہدف 443 رنز ہے جو 2006 میں سری لنکا نے ہالینڈ کے خلاف بنایا تھا اورمارچ 2006 میں ہی جنوبی افریقن ٹیم جوہانسبرگ میں آسٹریلیا کے خلاف 438 رنز بنا چکی ہے۔

بورڈ نے ریکارڈ ساز یونس خان کو خالی مبارکباد پر ٹرخا دیا

سینئر بیٹسمین پاکستان کرکٹ کے شاندار سفیر ہیں، قوم کوکارناموں پر فخر ہے،چیئرمین

سینئر بیٹسمین پاکستان کرکٹ کے شاندار سفیر ہیں، قوم کوکارناموں پر فخر ہے،چیئرمین

ابو ظبی:  پی سی بی نے ریکارڈ ساز یونس خان کو خالی مبارکباد پر ٹرخا دیا، انعام سے نوازنے کا فیصلہ بعد میں کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق یونس خان نے آف سپنر معین علی کو چھکا جڑ کر جاوید میانداد کا پاکستان کیلیے سب سے زیادہ ٹیسٹ رنز کا ریکارڈ توڑ دیا لیکن اس سنگ میل کو عبور کرنے پر پی سی بی کی جانب سے کسی انعام کا اعلان کرنے کے بجائے صرف مبارکباد اور چند تعریفی جملوں کو کافی خیال کیا گیا ہے۔

دورۂ سری لنکا مکمل ہونے کے بعد ہی اس بات کا قوی امکان تھا کہ یونس خان انگلینڈ  کیخلاف ابوظبی ٹیسٹ میں یہ کارنامہ سرانجام دے دینگے تاہم بورڈ کی طرف سے پذیرائی کیلیے کوئی خصوصی پروگرام تشکیل دینے یا اپنے طور پر انعامی رقم طے کرنے کی ضرورت محسوس نہیں کی گئی۔

 سینئر بیٹسمین کیلیے انعام کا فیصلہ بعد میں کیا جائے گا، پی سی بی کی جانب سے جاری کردہ پریس ریلیز میں چیئرمین پی سی بی شہریار خان کا جو پیغام جاری کیا گیا اس میں کہا گیاکہ یونس خان پاکستان کرکٹ کے شاندار سفیر ہیں۔ انھوں نے ریکارڈزکے ڈھیر لگادیے جو پوری قوم کیلیے بڑے فخر کی بات ہے، انھیں 22سال کے طویل عرصے بعد جاوید میانداد کا سب سے زیادہ رنز کا سنگ میل عبور کرنے پر مبارکباد پیش کرتے ہیں، امید ہے کہ اسی انداز میں ملک کی خدمت کا سلسلہ جاری رکھیں گے۔ پی سی بی کی ایگزیکٹیو کمیٹی کے چیئرمین نجم سیٹھی اور چیف آپریٹنگ آفیسر سبحان احمدنے بھی سینئر بیٹسمین کو سراہا۔

پہلا ون ڈے؛ پاکستان کے 259 رنز کے جواب میں زمبابوے کی بیٹنگ جاری

pak zamb final

زمبابوے کے کپتان ایلٹن چگمبرا نے ٹاس جیت کر پہلے پاکستان کو بیٹنگ کی دعوت دی.

ہرارے: پاکستان نے پہلے ایک روزہ میچ میں زمبابوے کو جیت کے لیے 260 رنز کا ہدف دیا جس کے جواب میں زمبابوے کی بیٹنگ جاری ہے۔

زمبابوے کے ہرارے اسپورٹس کلب میں کھیلے جانے والے پہلے ایک روزہ میچ میں پاکستان نے زمبابوے کو جیت کے لیے 260 رنز کا ہدف دیا جس کے جواب میں زمبابوے کی بیٹنگ جاری ہے، چمو چھبابا اور برائن چری نے اننگز کا آغاز کیا۔

اس سے قابل زمبابوے کے کپتان ایلٹن چگمبرا نے ٹاس جیت کر پہلے پاکستان کو بیٹنگ کی دعوت دی جب کہ پاکستان نے مقررہ 50 اوورز میں 6 وکٹوں کے نقصان پر 259 رنز بنائے۔ کپتان اظہر علی اور احمد شہزاد نے اننگز کا آغاز کیا تاہم ٹاپ آرڈر بیٹنگ میں اچھی کارکردگی نہ دکھاسکا، کپتان 11 اور احمد شہزاد 12 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے جب کہ محمد حفیظ بھی 10 رنز بنا کر آوٹ ہوگئے ہیں، شعیب ملک اور سرفراز احمد کے درمیان 65 رنز کی شراکت داری ہوئی لیکن شعیب ملک 31 رنز پر بولڈ ہوگئے،سرفراز احمد اور محمد رضوان نے بھی 28 رنز کی پارٹنرشپ قائم کی تاہم سرفراز احمد 44 رنز پر پویلین لوٹ گئے جب کہ وکٹ کیپر محمد رضوان اور آل راونڈر عماد وسیم کے درمیان چھٹی وکٹ کے لیے 123 رنز کی شراکت دار قائم ہوئی عماد وسیم 61 رنز کی شاندار اننگز کھیل کر آخری اوور میں رن آوٹ ہوگئے جب کہ محمد رضوان 75 رنز پر ناٹ آوٹ رہے۔ زمبابوے کی جانب سے پنیانگارا، جونگوے، اور کریمر نے ایک ایک وکٹ حاصل کی

واضح رہے کہ اس سے قبل 2 ٹی ٹوئنٹی میچوں کی سیریز میں پاکستان نے زمبابوے کو کلین سویپ کیا تھا۔

رگبی یونین کی تاریخ کا سب سے بڑا اپ سیٹ

rugby

 رگبی ورلڈکپ کے گروپ بی کے ایک میچ میں جاپان نے دو دفعہ کے عالمی چمپیئن اور فیورٹ جنوبی افریقہ کو34-32سے ہرا کر رگبی یونین کی تاریخ کا سب سے بڑا اپ سیٹ کر دیا ۔

انگلینڈ میں کھیلے جانے والے رگبی ورلڈکپ 2015 کے پول بی کے میچ میں جاپان کے کیرنے ہیسکیتھ نے آخری لمحات میں جنوبی افریقاسے فتح چھین لی۔

جنوبی افریقہ کو فرانکوئس لو اور بسمارک دو پلیسی کے بہترین کھیل کے باعث میچ کی ابتدا میں جاپان پر 12-10 سے برتری حاصل تھی لیکن جاپان کے آئیومو گورومارو نے 24 پوائنٹ حاصل کر کے میچ کو سنسی خیز بنادیا جسے ہیسکیتھ نے ڈرامائی فتح میں تبدیل کردیا۔